الفت کی نئی منزل کو چلا تو باہیں ڈال کہ باہوں میں …

الفت کی نئی منزل کو چلا تو باہیں ڈال کہ باہوں میں
دل توڑنے والے دیکھ کہ چل ہم بھی تو پڑے ہیں راہوں میں
الفت کی نئی منزل کو چلا

کیا کیا نہ جفائیں دل پہ سہیں پر تم سے کوئی شکوا نہ کیا
پر تم سے کوئی شکوا نہ کیا
اس جرم کو بھی شامل کر لو میرے ماسوم گناہوں میں
دل توڑنے والے دیکھ کہ چل ہم بھی تو پڑے ہیں راہوں میں
ہم بھی تو پڑے ہیں راہوں میں
الفت کی نئی منزل کو چلا

جب چانرنی راتوں میں تو نے خود ہم سے کیا اقرار وفا
خود ہم سے کیا اقرار وف
پھر آج ہیں کیوں ہم بیگانے تیرے بے رحم نگاہوں میں
دل توڑنے والے دیکھ کہ چل ہم بھی تو پڑے ہیں راہوں میں
ہم بھی تو پڑے ہیں راہوں میں
الفت کی نئی منزل کو چلا

ہم بھی ہیں وہی تم بھی ہو وہی یہ اپنی اپنی قسمت ہے
یہ اپنی اپنی قسمت ہے
تم کھیل رہے ہو خشیوں سے ہم ڈوب گئے ہیں آہوں میں
دل توڑنے والے دیکھ کہ چل ہم بھی تو پڑے ہیں راہوں میں
ہم بھی تو پڑے ہیں راہوں میں
الفت کی نئی منزل کو چلا

Advertisements

No comments yet»

Leave a Reply

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

You are commenting using your WordPress.com account. Log Out / Change )

Twitter picture

You are commenting using your Twitter account. Log Out / Change )

Facebook photo

You are commenting using your Facebook account. Log Out / Change )

Google+ photo

You are commenting using your Google+ account. Log Out / Change )

Connecting to %s

%d bloggers like this: